آئی ایم ایف کا پاکستان سے سبسڈیز کا فائدہ غریب عوام کو پہنچانے کا مطالبہ

عالمی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) کی منیجنگ ڈائریکٹر (ایم ڈی) کرسٹالینا جارجیوا کا کہنا ہے پاکستان میں سبسڈیز کا منصفانہ نظام ہونا چاہیے۔

میونخ سکیورٹی کانفرنس میں جرمن میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے آئی ایم ایف چیف کرسٹالینا جارجیوا کا کہنا تھا پاکستان کو شدید معاشی بحران کا سامنا ہے جس سے نمٹنے کے لیے وہ آئی ایم ایف سے مدد مانگ رہا ہے۔ان کا کہنا تھا پاکستانی عوام سیلاب کی تباہی سے دوچار ہیں، پاکستان میں تقریباً ایک تہائی لوگ سیلاب سے متاثر ہوئے ہیں، ہم چاہتے ہیں پاکستان ایک ملک کے طور پر اقدامات کرے، پاکستان کو ایسے اقدامات کی ضرورت ہے کہ وہ اس قسم کی خطرناک صورت حال سے دوچار نہ ہو کہ اسے اپنے قرضے ری اسٹرکچر کرنا پڑیں۔

کرسٹالینا جارجیوا کا کہنا تھا ہم پاکستان پر دو اہم نکات پر زور دے رہے ہیں، پاکستان کے لیے پہلا نکتہ ٹیکس ریونیو کا ہے، جو لوگ نجی یا عوامی سیکٹر سے اچھا کما سکتے ہیں انہیں معیشت میں حصہ ڈالنا چاہیے، پاکستان کے لیے دوسرا نکتہ ہے کہ وہاں دولت کی منصفانہ تقسیم ہونی چاہیے، پاکستان میں غریبوں کو سبسڈی دی جائے کیونکہ انہیں تحفظ کی ضرورت ہے، پاکستان میں امیر طبقے کو تحفظ نہ دیا جائے اور نہ ہی انہیں سبسڈی ملے۔

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Scroll to Top